دو نئے ہیرو ، جن کے پاس کرکٹ کا سامان لینے کے پیسے نہیں تھے، مگر انڈیا کے خلاف میچ جتوا دیا۔۔

706

دو نئے ہیرو ، جن کے پاس کرکٹ کا سامان لینے کے پیسے نہیں تھے، مگر پاکستان کو انڈیا کے خلاف میچ جتوا دیا۔۔

انڈر نائینٹن کرکٹ ایشیا کپ اس سال یونائیٹڈ عرب امارات میں جاری ہے ، پاکستان کرکٹ اس ایشیا کپ میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے ، پاکستان کرکٹ ٹیم نے اپنے پہلے میچ میں یو اے ای کی ٹیم کو 21 رنز سے شکست دی ، دوسرے میچ میں انڈیا کو عبرتناک شکست سے دوچار کیا۔ آج پاکستان اور سری لنکا کے درمیان میچ کھیلا جا رہا ہے ، پاکستان کرکٹ ٹیم کی گرفت کافی مضبوط ہو چکی ہے ، انڈیا کے خلاف ہونے والے میچ پاکستانی کھلاڑیوں نے دھماکے دار کارکردگی دیکھائی اور آخری گیند پر میچ انڈیا کے ہاتھ سے چھین لیا۔

پاکستان اور انڈیا کے درمیان ہونے والے میچ میں پاکستان کو دو نئے ہیرو مل گئے ہیں ، محمد شہزاد اور ذیشان ضمیر نے شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے ، انڈیا کے ہاتھ سے فتح چھین لی۔محمد شہزاد کا تعلق ایک غریب گھرانے سے ہے ، محمد شہزاد کے بچپن میں ہی ان کی والد کی وفات ہو گئی تھی ، 9 سال محنت مزدوری کی اور کرکٹ کھیلی ،اور اب آ کر اپنی تعلیم شروع کی ، محمد شہزاد کی طرح کراچی سے تعلق رکھنے والے ذیشان ضمیر کا تعلق بھی ایک انتہائی غریب گھرانے سے ہے ۔ فیملی غریب ہونے کی وجہ سے ، کرکٹ کا سامان خریدنے کے پیسے نہیں تھے ، مگر ذیشان ضمیر نے ہمت نہیں ہاری۔ آج پاکستان انڈر نائیٹین کرکٹ ٹیم کا حصہ ہیں ، اور انڈیا کے خلاف شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ، اور پاکستانیوں کا سر فخر سے بلند کر دیا۔ ذیشان ضمیر اور محمد شہزاد جیسے نئے ہیرو پاکستان کو مل گئے ہیں۔